French Ambassador Martine Dorance visited the University of Agriculture Faisalabad. She decorated UAF Vice-Chancellor Prof. Dr. Iqrar Ahmad Khan with the French Civil Award - Ordre des Palmes Académiques - in recognition of his tremendous services for education and research on behalf of the French government

فیصل باد 19مئی ) ( فرانسیسی حکومت نے تعلیم و تحقیق کے شعبہ میں گراں بہاخدمات اور پاک فرانس اکیڈمک و ریسرچ تعاون کے فروغ میں مثالی کردار پر زرعی یونیورسٹی فیصل باد کے وائس چانسلرپروفیسرڈاکٹر اقرار احمد خاں کو لیس پالمس اکیڈمک ایوارڈ سے نوازاہے۔ پاکستان میں فرانسیسی سفیر مسزمارٹین ڈورنس نے یونیورسٹی کے ڈی گرائونڈ میں منعقدہ عشائیہ کے دوران ایک پروقار تقریب میں وائس چانسلرپروفیسرڈاکٹر اقراراحمد خاں کوفرانسیسی حکومت کی جانب سے ایوارڈ اور سرٹیفکیٹ عطائ کیا۔دو صدیوں سے زائد عرصہ قبل نپولین بونا پاٹ کی طرف سے شروع کئے جانیوالے اس امتیازی ایوارڈ کو1955ئ میں اس وقت کے فرانسیسی صدرکے نام سے منسوب کر دیا گیاجوتعلیم وتحقیق کے شعبہ میں بے مثال خدمات کے اعتراف میں غیرمعمولی صلاحیتوں کی حامل نابغہ روزگار شخصیات کو دیا جاتا ہے۔

پروفیسرڈاکٹر اقراراحمد خاں اعلیٰ ترین فرانسیسی سول ایوارڈ حاصل کرنے والے چند ایک پاکستانی ماہرین میں شامل ہیں جن کی تعلیمی و تحقیقی خدمات کو فرانسیسی حکومت کی طرف سے پذیرائی بخشی گئی ہے۔ڈاکٹر اقرار احمد خاں نے دیگر نمایاں کامیابیوں اور خدمات کے ساتھ ساتھ 2008ئ میں یونیورسٹی کے وائس چانسلرکی حیثیت سے ایگروکیمپس رینس ٗفرانس کے ساتھ فوڈ ٹیکنالوجی ٹرانسفرسنٹر کے معاہدے پر دستخط کئے جس کے تحت یونیورسٹی کے 13نوجوانوں کو فرانسیسی جامعات میں پی ایچ ڈی کرنے کے مواقع حاصل ہوئے جس کے بعد دو طرفہ تعاون اور اشتراک عمل میں نمایاں اضافہ ہوا۔مزید برں پاکستان میں فرانسیسی سفارتخانے کے ساتھ روابط اور تعاون میں نمایاں پیش رفت پر بھی ڈاکٹراقرار احمد خاں کی خدمات کو خاص طو رپر سراہا گیا۔اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے یونیورسٹی کے وائس چانسلرپروفیسرڈاکٹر اقراراحمد خاں نے کہا کہ انہوں نے یونیورسٹی قیادت اس وقت چیلنج سمجھ کر سنبھالی جب ملک کی کوئی بھی یونیورسٹی دنیا کی 500بہترین جامعات میں شامل نہیں تھی جبکہ اب گزشتہ چار برسوں سے یونیورسٹی نہ صرف او ئی سی ممالک میں دوسری پوزیشن بلکہ این ٹی یورینکنگ میں نمایاں بہتری کرتے ہوئے دنیا کی 97ویں ٗ ایشیائ پیسی فک کی 20بہترین جامعہ بلکہ حال ہی میں کیو ایس ورلڈ یونیورسٹی رینکنگ میں گزشتہ سال 137ویں پوزیشن سے ترقی کرتے ہوئے 85ویں جامعہ بن چکی ہے۔انہوں نے کہا کہ بڑھتی ہوئی انرول منٹ کے چیلنجز سے نبردزما ہونے کیلئے بنیادی ڈھانچے کی ترقی سمیت نئے اساتذہ کی بھرتی بھی کی جا رہی ہے تاکہ کوالٹی ایجوکیشن پر کوئی سمجھوتہ نہ کیا جائے۔ انہوں نے وفاقی اور صوبائی حکومت کی طرف سے یونیورسٹی میں ہزار طالبات کیلئے ہاسٹل‘ پنجاب بائیوانرجی انسٹی ٹیوٹ‘ نئی لائبریری‘ سٹوڈنٹ سہولت سنٹر‘سٹوڈنٹس ہاسٹل اور ئی ٹی انفراسٹرکچر جیسے بڑے منصوبوں کیلئے اربوں روپے کی فنڈنگ کو خاص طور پر سراہا۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب نے حالیہ دورہ یونیورسٹی کے دوران کیو ایس رینکنگ میں 85ویں پوزیشن کو خاص طور پر سراہتے ہوئے توقع ظاہر کی کہ اسی جذبے اور محنت کومزید توانائی دیتے ہوئے یونیورسٹی جلد ہی دنیا کی 50بہترین جامعات کی فہرست کا حصہ ہوگی۔انہوں نے کہا کہ ہم ہر دستیاب پلیٹ فارم پر کسان کی نمائندگی و وکالت کا فریضہ ادا کرتے ہیں جسے وفاقی و صوبائی سطح پر سنجیدگی سے لیا جاتا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ فرانسیسی اداروں کے ساتھ ملک پراسیسنگ‘ پنیرکی تیاری اور فوڈ ویلیو ایڈیشن کے شعبوں میں تعاون میں اضافہ ہوا ہے جسے مزید وسیع کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ 20کروڑ بادی والے ملک میں جہاں 40فیصد بادی متوازن خوراک کی عدم فراہمی کا شکا رہوں اور 60فیصد خواتین خون کی کمی کی وجہ سے اپنا تعمیری کردار ادا کرنے سے قاصر ہوں ‘ سائنس دانوں کو بڑے چیلنج درپیش ہیں جس کیلئے انہیں تحقیقی لیبارٹریوں سے باہر کمیونٹی اور انڈسٹری کے ساتھ اپنے روابط کو مزید مضبوط کرنا ہوگا۔انہوں نے فرانسیسی ایوارڈ پر فرانسیسی حکومت کا شکریہ بھی ادا کیا۔

 

Media Coverage

DUNYA News

The News

The Tribune

Business Recorder